Urdu News and Media Website

پنجاب یونیورسٹی میں تصادم،المحمدیہ سٹوڈنٹس کا ذمہ داران کیخلاف کارروائی کا مطالبہ

لاہور(نیوزنامہ )المحمدیہ سٹوڈنٹس پنجاب یونیورسٹی میں ہونے والے تصادم کی بھرپور مذمت کرتی ہے۔ جامعات تعلیم کے لیے مختص ہیں۔ ان اداروں میں ماحول پر امن اور علم دوست ہونا چاہیے۔ جامعات میں شرپسند عناصر کو فوری گرفتار کیا جائے اور طلبا کو تعلیم کے لیے پر امن ماحول فراہم کیا جائے۔ ترجمان المحمدیہ سٹوڈنٹس حنظلہ عماد نے پنجاب یونیورسٹی میں ہونے والے تصادم پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ جامعات میں موجود طلبا تنظیموں یا دیگر لسانی و صوبائی بنیادوں پر بننے والے گروہوں کی سرگرمیوں پر پابندی عائد ہونی چایئے۔ صرف علم دوست اور ہم نصابی سرگرمیوں کی اجازت ہونی چاہیے۔ ایسے واقعات کے باعث نہ صرف تعلیم کا عمل متاثر ہوتا ہے بلکہ طلبا میں خوف و ہراس پھیلتا ہے اور تعلیم کا عمل سستی کا شکار ہوتا ہے۔حنظلہ عماد کا مزید کہنا تھا کہ جامعات میں موجود ایسے عناصر کی وجہ سے لسانی و صوبائی تعصب کو بھی فروغ مل رہا ہے۔ اس لیے المحمدیہ سٹوڈنٹس کی جانب سے مطالبہ کیا گیا ہے کہ وائس چانسلر اور دیگر مقتدر طبقے جلد از جلد اس معاملے کا نوٹس لیں اورا س واقعے میںملوث عناصر کو قرار واقعی سزا دی جائے۔ مزید براں ایسے عناصر کی مستقل بیخ کنی کے لیے ایک کمیٹی تشکیل دی جائے اور مستقل بنیادوں پر اس مسئلہ کو حل کیا جائے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.