Urdu News and Media Website

کشمیر سے متعلق گاندھی کا 73 سال پرانا آڈیو کلپ منظر عام پر آگیا

بھارت لاکھ کشمیر کو اپنا اٹوٹ انگ قرار دیتا رہے لیکن مہاتما گاندھی کا 1947ء میں دیا گیا ایک بیان ہی اس کے سارے دعوؤں پر پانی پھیرنے کے لیے کافی ہے۔

جی ہاںبھارت کے بابائے قوم مہاتما گاندھی کے کشمیر سے متعلق بیان کی 73 سال پرانی ایک آڈیو کِلپ منظر عام پر آئی ہے جس نے کشمیر کے بھارت کے اٹوٹ انگ ہونے کے دعووں کوپیروں تلے کچل دیا ہے۔

مہاتما گاندھی کا یہ مبینہ آڈیو کلپ اکتوبر1947ءکا
بتایا جاتا ہے جس میں انہوں نے دو ٹوک انداز میں
کشمیر کو جبر کے ذریعے بھارت یا پاکستان میں شامل
کرنے کی مخالفت کی اور فیصلہ کشمریوں پر
چھوڑ دینے پر زور دیا۔

یہ بھی پڑھیں: پہلی بار بھارت اقلیتوں کے لیے خطرناک ملک قرار

مہاتما گاندھی نے کہا تھا کہ کشمیری پاکستان کے ساتھ
جانا چاہیں تو دنیا کی کوئی طاقت انہیں روک نہیں سکتی۔

 

اسی حوالے سے وزیر اطلاعات پنجاب
فیاض چوہان نے بھی اپنے ایک سوشل میڈیا پیغام میں
اسی آڈیو کلپ کو منسلک کرتے ہوئے لکھا ہے کہ
یہ بھارت کے بانی مہاتما گاندھی کے سیکولرازم اور
کشمیر سے متعلق خیالات ہیں، جب کہ نریندر مودی
کے بھارت میں کشمیریوں پر ظلم کے
پہاڑ توڑے جا رہےہیں۔

یہ بھی پڑھیں: بھارت کرونا سے بھی زیادہ خطرناک وائرس کی لپیٹ میں آگیا

دوسری جانب گزشتہ سال ایک بھارتی اخبار نے بھی
حرف بہ حرف یہی الفاظ مہاتما گاندھی سے منسوب کیے تھے۔
لاہور(ویب ڈیسک)

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.