Urdu News and Media Website

مودی حکومت کے مسلم کش اقدامات پر بھارتی مصنفہ پھٹ پڑیں

معروف بھارتی مصنفہ بھارت میں مسلمانوں پر ہونے والے مظالم پر بی جے پی حکومت پر برس پڑیں،عالمی برادری سے مودی حکومت کے مسلم کش اقدامات کا نوٹس لینے کا مطالبہ کر دیا۔

تفصیلات کے مطابق معروف بھارتی مصنفہ ارون دھتی رائے نے جرمن خبر رساں ادارے’’ ڈوئچے ویلے ‘‘کو انٹرویو دیتے ہوئے کہا کہ بھارت کی نسل پرست حکومت کی پالیسیاں مسلمانوں کی نسل کشی کی طرف بڑھ رہی ہیں۔
ارون دھتی رائے نے انٹرویو میں کہا کہ کہ انتہا پسند راشٹریہ سویم سیوک سنگھ (آر ایس ایس)
کی پیداوار بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کی حکومت مسلمانوں کے ساتھ
وہی کرنا چاہتی ہے جو جرمنی میں یہودیوں کے ساتھ کیا گیا۔

یہ بھی پڑھیں: بی جے پی قیادت مسلمانوں کے خلاف نازیوں کا رویہ اپنارہی ہے: وزیراعظم عمران خان

ان کا کہنا تھا کہ بھارت میں کرونا کو مسلمانوں کے خلاف اسی طرح استعمال
کیا جارہا ہے جیسے ٹائیفائیڈ کو یہودیوں کے خلاف استعمال کیا گیا۔

بھارتی مصنفہ کا کہنا تھا کہ ہم کرونا کی وجہ سے ہی نہیں بلکہ نفرت اور بھوک
کے بحران کے باعث بھی مصیبت میں ہیں۔
بھارتی مصنفہ نے عالمی برادری کو خبر دار کرتے ہوئے کہا کہ عالمی برادری
بھارت میں اس صورتحال کو ہلکا نہ لے۔

یہ بھی پڑھیں: مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج کے مظالم جاری،مزید 4کشمیری شہید

واضح رہے کہ بھارت میں کرونا وائرس کے نام پر مسلمانوں اور
دوسری اقلیتوں کو نفرت کا نشانہ بنایا جارہا ہے۔
حال ہی میں جب تبلیغی جماعت سے وابستہ افراد میں مہلک وائرس کی
تشخیص ہوئی تو بھارت کے متعصب میڈیا نے آسمان سرپر اٹھاتے
ہوئے ملک میں کورونا پھیلنے کی تمام تر ذمہ داری مسلمانوں پر عائد کردی تھی۔
نئی دہلی(ویب ڈیسک)

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.