Urdu News and Media Website

ایرانی القدس فورس کے سربراہ جنرل قاسم سلیمانی امریکی حملے میں مارے گئے

اسلام آباد(ویب ڈیسک)ایران کی القدس فورس کے سربراہ جنرل قاسم سلیمانی بغداد ایئرپورٹ پر امریکا کے فضائی حملے میں مارے گئے،عراق میں ایران کی حمایت یافتہ ملیشیا پاپولرموبلائزیشن فورس کے کمانڈر ابومہدی المہندس بھی حملے میں مارے گئے۔جنرل قاسم سلیمانی کی گاڑی کوراکٹ سے نشانہ بنایا گیا۔القدس فورس کے سربراہ پر حملے کےبعد امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے اپنے ٹویٹر اکاؤنٹ پرامریکی پرچم لگایا،جبکہ پینٹا گون نے تصدیق کرتے ہوئے کہا کہ جنرل قاسم سلیمانی کو صدرٹرمپ کے کہنے پر ماراگیا ہے۔ایران نے شدید ردعمل کااظہار کیا ہے،ایرانی سپریم لیڈر آیت اللہ خامنہ ای اور صدر حسن روحانی نے امریکا سے بدلہ لینے کا اعلان کردیا،ایرانی وزیرخارجہ جوادظریف نے کہا کہ امریکی حملہ عالمی دہشتگردی ہے،امریکا کو نتائج بھگتنے پڑیں گے۔ادھر عراقی وزیراعظم نے امریکی حملے کو جارحیت قرار دیتے ہوئے کہا کہ حملے سے عراق میں جنگ کے شعلے مزید بھڑکیں گے۔عراقی رہنما مقتدالصدر نے امریکا مخالف فورسز کو دوبارہ فعال کردیاہے۔امریکا نے اپنے شہریوں کو فوری طورپر عراق چھوڑ دینے کا کہہ دیا ہے۔چین نے فریقین سے صبروتحمل سے کام لینے کی اپیل کی ہے۔برطانیہ نے مشرق وسطیٰ میں قائم اپنے فوجی اڈوں پر ہائی الرٹ کردیاہے۔

تبصرے