Urdu News and Media Website

کینسر قابلِ علاج مرض ہے ،خوف زدہ نہیں ہونا چاہیے: ڈاکٹر محمدثاقب خان

ملتان(نیوزنامہ)کینسر قابلِ علاج مرض ہے اور یہ چھُوت کا مرض نہیں ہے۔ اس لئے کینسر سے خوف زدہ نہیں ہونا چاہیے۔ ان خیالات کا اظہار ڈائریکٹر مینار کینسر ہسپتال ملتان ڈاکٹر محمدثاقب خان نے کینسر کے عالمی دن کے حوالے سے منعقدہ تقریب میں کیا۔ انہوں نے کہا کہ کینسر کے پھیلنے کی وجہ صفائی کا نہ ہونا ، ناقص خوراک، ماحولیاتی آلودگی اور بیماری سے آگاہی نہ ہونا ہے۔اس لئے عوام کو چاہیے کہ وہ سال میں ایک بار اپنا چیک اپ لازمی کروائیں۔تمام جسم میں ہونے والی تبدیلیوں کا علم ہو۔ کینسر کے تیزی سے پھیلنے کی ایک وجہ یہ بھی ہے کہ عوام میںابھی تک یہ شعور پیدا نہیں ہوا کہ وہ اپنی تکالیف کے لئے ڈاکٹر سے رابطہ کریں۔ ڈاکٹر محمد ثاقب خان نے کہا کہ مینار کینسر ہسپتال ملتان خطّے کا واحد سرکاری ہسپتال ہے جہاں مریضوں کا علاج و معالجہ پوری توجہ سے کیا جاتا ہے۔مینار کینسر ہسپتال ملتان کے شعبہ کینسر کے سربراہ ڈاکٹر اللہ رکھا عادل نے کہا کہ لوگ کینسر کا نام سنتے ہی پریشان ہو جاتے ہیں اور اپنے مریض کو گھر میں رکھ کر اس کے مرنے کا انتظارشروع کر دیتے ہیں۔ جدید تحقیق کے مطابق کینسر 90% قابلِ علاج مرض ہے اور 10%وہ مریض ہیںجو لاعلمی کی وجہ سے اُس وقت ڈاکٹرز سے رابطہ کرتے ہیں جب کینسر جسم میں پھیل چکا ہوتا ہے۔ مینار کینسر ہسپتال ملتان کے کینسر سپشلسٹ ڈاکٹر عبدالمتین نے سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کہا جنوبی پنجاب میں کینسر کے تیزی سے پھیلنے کی وجہ ناقص خوراک اور ہمارا طرزِزندگی ہے۔ جس وجہ سے لوگ اس بیماری میں مبتلا ہو رہے ہیں۔ اس سلسلہ میں ہمیں چاہیے کہ کھاتے وقت بازار کے کھانوں کی بجائے گھر کے پکے ہوئے کھانے کھائیں تاکہ ہم اس بیماری سے محفوظ رہ سکیں۔جنوبی پنجاب کی معروف ماہرِامراض کینسر ڈاکٹر قراۃُالعین ہاشمی نے کہا عورتوں میں چھاتی کے سرطان کے پھیلنے کی وجہ یہ ہے کہ وہ شرم اور جھجھک کی وجہ سے ڈاکٹر سے رابطہ نہیں کرتیں ۔ جس وجہ سے بچیوں اور عورتوں میں سینے کا سرطان تیزی سے پھیل رہا ہے۔مستقبل میں بچیوں اور عورتوں کو اس بیماری سے بچائو کے لئے نہ صرف ڈاکٹرز سے مستقل رابطہ رکھنا چاہیے بلکہ تعلیمی اداروں میں خصوصی طور پر لیکچرز اور کینسرسے بچائو کے لئے آگاہی پروگرام ہونے چاہیے تا کہ نئی نسل کینسر سے محفوظ رہ سکے۔ اس سیمینار سے ڈاکٹر عارف معین قریشی اور ڈاکٹر فامیا عبداللہ نے بھی خطاب کیا۔ تقریب کے آخر میں عوام میں آگاہی پمفلٹ تقسیم کیے گئے۔

تبصرے