Urdu News and Media Website

‘ارطغرل اسی لیے دکھایا گیا تاکہ عوام گھوڑوں پر سفر کرے’

پاکستان کے نامور یوٹیوبر اور اداکار ارسلان نصیر نے پاکستان میں پیٹرول کی قیمت میں 12 روپے کے بڑے اضافے پر مضحکہ انداز میں غصے کا اظہار کیا ہے۔

عوام سمیت پیٹرول کی قیمتوں پر پاکستانی اداکار اور نامور شخصیات بھی حیران و پریشان ہیں، ساتھ ہی پیٹرول کی قیمتوں کا ہیش ٹیگ ٹوئٹر پر ٹاپ ٹرینڈ میں شامل ہے، مہنگائی سے ستائی عوام اپنا غم و غصہ اور بھڑاس سوشل میڈیا پر نکال رہی ہے۔

پیٹرول ملکی تاریخ کی بلند ترین سطح پر پہنچ گیا، 159 روپے 86 پیسے فی لیٹر ملے گا

یوٹیوبر ارسلان نصیر نے ٹوئٹر پر جاری پیغام میں سوال کیا کہ آپ کے خیال میں پاکستانی حکومت نے ترک سیریز ارطغرل غازی کیوں نشر کی؟

ساتھ ہی انہوں نے لکھا کہ ارطغرل ڈرامہ اسی لیے دکھایا جا رہا تھا تاکہ عوام گاڑیاں چھوڑ کر گھوڑوں پر سفر کرے۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز ہی وفاقی حکومت نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمت میں بڑا اضافہ کیا ہے۔

وزارت خزانہ کی جانب سے جاری نوٹیفکیشن کے مطابق 12 روپے 3 پیسے فی لیٹر اضافے کے بعد پیٹرول کی نئی قیمت 159 روپے 86 پیسے ہوگئی ہے۔

اس کے علاوہ ڈیزل کی قیمت میں بھی 9 روپے 53 پیسے فی لیٹر کا اضافہ کیا گیا ہے جس کے بعد ڈیزل کی نئی قیمت 154 روپے 15 پیسے ہو گئی ہے۔

تبصرے