Urdu News and Media Website

عظیم الشان فتح ونصرت کے قریب ہیں:یمنی وزیراعظم

صنعاء(مانیٹرنگ ڈیسک)یمن کے وزیراعظم احمد بن دغر نے کہا ہے کہ خادم الحرمین الشریفین شاہ سلمان بن عبدالعزیز آل سعود نے یمن میں باغیوں کے خلاف ’فیصلہ کن طوفان‘ آپریشن شروع کرکے تاریخ ساز کام کیا ہے۔ اس آپریشن نے یمنی باغیوں کو کچلنے میں اہم کردار ادا کیا اور اس کے ساتھ ساتھ فیصلہ کن طوفان نے عرب ممالک کو ایران کے مذموم عزائم کے خلاف متحدہ کردیا ہے۔ انہوں نےکہا کہ آج ہم عظیم الشان فتح ونصرت کے قریب ہیں۔ غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق یمنی زیر زیراعظم نے ایک اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ایران حوثی باغیوں کو عرب اور عالمی گذرگاہوں پر قبضے کے لیے آلہ کار کے طورپر استعمال کرنا چاہتا ہے۔بن دغر کا مزید کہنا تھا کہ یمن کی آئینی حکومت کی وفادار فوج نے عرب ممالک کی افواج کی معاونت سے ملک کا 85 فی صد علاقہ باغیوں کے قبضے سے واپس لے لیا ہے۔بہت جلد تعز شہر کو بھی باغیوں کے قبضے سے آزاد کرالیا جائے گا۔یمنی وزیراعظم نے ان خیالات کا اظہار عرب ممالک کی مسلح افواج کے سربراہان پر مشتمل ایک وفدسے ملاقات کے دوران کیا۔ ملاقات کرنے والوں میں سعودی عرب کی مسلح افواج کے سربراہ بریگیڈیئر محمد الحسنی،بریگیڈیئر سلطان ابو عبدالعزیز اور کئی دوسری اہم شخصیات شامل تھیں۔اجلاس میں یمنی حکومت نے عبوری دارالحکومت عدن میں احتجاج کی آڑ میں تخریب کاری، افراتفری اور انارکی پھیلانے کی سازشوں کو مسترد کردیا۔

تبصرے