Urdu News and Media Website

سیمل راجہ نے فیملی جج کی عدالت میں جواب جمع کروا دیا

لاہور(نیوزنامہ)سابق صوبائی وزیر قانون محمد بشارت راجہ کی اہلیہ سیمل راجہ نے اپنے وکلاء عاشق حسین، غلام مجتبی چوہدری ،بیرسٹر احمد سعید،مدثر چوہدری ایڈوکیٹس کی وساطت سے فیملی جج شمیم اختر وٹو کی عدالت میں فیملی دعوے کا تقریبا 14 سو صفحات پر مشتمل جواب بمعہ دستاویزی ثبوت جمع کروا دیا،تفصیلات کے مطابق سیمل راجہ کے جواب کے متن کے مطابقبشارت راجہ نے پیشے اور اثر و رسوخ استعمال کر کے عدالت میں یکطرفہ ڈگری حاصل کرنے کی کوشش کی تھی،بشارت راجہ کا دعوہ جھوٹ اور بددیانتی پر مبنی ہے شادی کی قانونی اور شرعی حیثیت تسلیم کرکے دعوے کو خارج کیا جائے۔ سیمل راجہ نے عدالت سے استدعا کی ہے کہنکاح نامہ کو رجسٹر کر کے  بشارت راجہ کو بحثیت بیوی حقوق /ذمہ داریاں پوری کرنے کا پابند کیا جائے۔ مسلم فیملی آرڈیننس کے سیکشن 5 کی خلاف ورزی کرتے ہوئے نکاح نامہ رجسٹر نہ کروانے پر بشارت راجہ کے خلاف قانونی کاروائ عمل میں لائی جائے۔
تبصرے