Urdu News and Media Website

ایران یمن میں قیامِ امن کی راہ میں رکاوٹ ہے، سعودی عرب

سعودی عرب کے وزیرِ خارجہ عادل الجبیر نے الزام عائد کیا ہے کہ یمن میں جاری بحران کے حل نہ ہونے کی ایک بڑی وجہ ایران کی معاندانہ پالیسی ہے جو وہاں قیامِ امن کی راہ میں رکاوٹ بن رہی ہے۔یمن گزشتہ چار برسوں سے خانہ جنگی کا شکار ہے جس کا آغاز ایران کے حمایت یافتہ حوثی باغیوں کی جانب سے دارالحکومت صنعا پر قبضے کے بعد ہوا تھا۔عرب ملکوں کی فوجی کارروائیوں اور فضائی حملوں کے بعد یمن کا بیشتر جنوبی علاقہ باغیوں سے آزاد کرالیا گیا ہے لیکن وہ اب بھی صنعا اور ملک کے شمالی حصوں پر قابض ہیں۔انہوں نے الزام لگایا کہ ایران یمن میں جاری قیامِ امن کی کوششوں کو بھی متاثر کر رہا ہے اور ایران کی مداخلت کےباعث ہی یمن کی حکومت اور قبائلی ملیشیاؤں کے درمیان مذاکرات ناکامی سے دوچار ہوئے ہیں۔

تبصرے