طلبہ پاکستان کا روشن مستقبل ہیں ،مایوس عوام کے لئے امید کی کرن بنیں گے:ناظم اعلیٰ جمعیت

161

لاہور(نیوزنامہ) پاکستان اس وقت اندرونی اور بیرونی خلفشار کا شکار ہے، اس کی بنیادوں کو ایک طرف جہاں بیرونی طاقتیں کھوکھلا کر رہی ہیں وہیں دوسری جانب اندرونی طور پر مختلف بہانوں سے اس کی جڑوں کو کھوکھلا کیا جا رہا ہے، ایک جانب دہشت گردی کا عفریت سے اسے نگل جا رہا ہے وہیں دوسری جانب اس کی نظریاتی اساس کو کمزور کرنے کی کوششیں کی جا رہی ہیں ، حالیہ رپورٹس کے مطابق اس وقت 62لاکھ نوجوان نشے کی لت میں مبتلا ہیں جو کہ اپنی ذات کو برباد کرنے کے ساتھ ساتھ معاشرے کی تباہی کا سبب بھی بن رہے ہیں۔3کروڑ سے زائد نوجوان تعلیم سے محروم ہیں، جس کی وجہ سے ملک کا مستقبل خطرے میں ہے ، ملک میں اس وقت ہر شعبہ میں عدم استحکام نظر آرہا ہے ۔عوام مایوسی کی وجہ سے پریشان ہے ان حالات میں قوم کی نظریں نوجوانوں اور طلبہ پر ہے لیکن پاکستانی نوجوان کو صحیح سمت دیکھانے کے لئے کسی کے پاس کوئی ٹھوس اور واضح لائحہ عمل نہیں ہے ۔حکومت کو چاہیے کہ حصول تعلیم کے لئے آسانیاں پیدا کرے ناکہ تعلیمی بجٹ میں کرپشن کرکے میٹرو بسس اور ٹرینیں چلائی جائیں،یہی وجہ ہے کہ حصول تعلیم میں مشکلات کی وجہ سے طالب علم تعلیم حاصل کرنے سے دور بھاگتا ہے۔ان باتوں کا اظہار ناظم اعلی جمعیت محمد عامر نے پشاور میں ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔انہوں نے مذید کہا تعلیمی بجٹ میں اضافے کے لئے بھرپور مہم چلاتے رہیں گے اور پاکستان کے مستقبل کی اصلاح کے لئے ہر قدم انکی رہنمائی کریں گے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.