سلگتاہوا روہنگیا بحران فوری حل کامتقاضی ہے:رانابشارت

126

لندن(نیوزنامہ)ہیومن رائٹس موومنٹ انٹرنیشنل برطانیہ کے صدرانا بشارت علی خاں نے کہا ہے کہ سلگتاہوا روہنگیا بحران فوری حل متقاضی ہے۔ اقوام متحدہ کے ہوتے ہوئے برما،بھارت اورفلسطین میں مسلمانوں کی مسلسل نسل کشی ایک بڑاسوالیہ نشان ہے ۔مقتدرقوتیں اس قدربے بس کیوں ہے ،برما کوروہنگیامسلمانوں کیخلاف انسا نی تاریخ کی بدترین بربریت سے کون روکے گا۔دنیا کاہرمہذب اورباضمیر فرد روہنگیا بحران کے سدباب کیلئے اپناکرداراداکرے۔ وہ روہنگیا مسلمانوں سے اظہاریکجہتی کیلئے ایک بڑے اجتماع سے خطاب کررہے تھے۔ملتان سے مسلم لیگ (ن) کے مرکزی رہنما اورسینئر پارلیمنٹرین رانامحمودالحسن خاں مہمان خصوصی تھے۔برطانیہ کے مختلف شہروں سے آنیوالی سیاسی وسماجی شخصیات نے بھی اجتماع سے خطاب کیا اورروہنگیا بحران کے سدباب کیلئے ہیومن رائٹس موومنٹ انٹرنیشنل کے مرکزی صدرمحمدناصراقبال خان اورصدربرطانیہ رانابشارت علی خاں کی جہدمسلسل کوسراہا۔ رانا بشارت علی خاں نے مزید کہا کہ روہنگیا کے معصوم مسلمان ناحق مارے گئے جبکہ عالمی ضمیر سویارہا ۔اگربرماکے شیطان صفت حکمرانوں بلکہ درندوں کو سخت سزانہ ملی تودنیا کے کسی ملک میں اقلیت کی زندگی اور انسانی ومذہبی آزادی محفوظ نہیں رہے گی ۔انہوں نے کہا کہ اگراقوام متحدہ نے رٹ نہ منوائی تو مسلمانوں کااس پرسے اعتماد اٹھ جائے گا۔اقوام متحدہ مذاہب کے درمیان کسی تفریق یاتعصب کامتحمل نہیں ہوسکتا۔انہوں نے کہا کہ جوملک اقوام متحدہ کے ممبر ہیں وہ اس کے ضابطہ اخلاق کی پاسداری کریں۔روہنگیا کے مسلمان برما حکومت یاریاست کیخلاف ہتھیار اٹھائے یاتشدد کاراستہ اختیارکئے بغیر شہریت اوراپنے بنیادی شہری حقوق ڈیمانڈکررہے ہیں جوانہیں ہرصورت ملناچاہئے ۔ انہوں نے کہا کہ روہنگیا مسلمانوں کی ابتر حالت زار سے چشم پوشی نہیں کی جاسکتی ۔ہیومن رائٹس موومنٹ انٹرنیشنل کے عہدیداران اورکارکنان ہرسطح پرروہنگیامسلمانوں کے بحران کاپائیدارحل تلاش ہونے اوران کے اپنے آبائی وطن واپس جانے تک ان کی بھرپور وکالت کریں گے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.