روزے کے صحت پر اثرات

53

لاہور(ویب ڈیسک)اسلام میںروزے کےصحت کے متعلق بے شمار فوائد بیان کیے گئے ہیں مگر اسلام کے ساتھ ساتھ سا ئنس بھی اس کے فوائد کو تسلیم کر تی ہے۔تفصیلات کے مطابق ماہرین کا کہنا ہے کہ دن بھر کچھ نہ کھانا پینا صحت کو مختلف بیماریوں سے محفوظ رکھتا ہے جیسے کولیسٹرول کا بڑھنا، قلب کے امراض، موٹاپا یا پھر دماغی صحت کا خراب ہونا۔ماہرین کی رپورٹ کے مطابق دن بھر میں کوئی غذا نہ لینا جسم کے جراثیم مٹاتا ہے اور نظام ہاضمہ کے عمل کو آرام دیتا ہے۔ روزے میں آنتیں صاف اور مضبوط ہوتی ہیں، اس کے ساتھ یہ بھوک کے عمل کو بڑھاتا ہے جس سے جسم کے خُلیے صاف ہوتے ہیں جب کہ روزہ جسم کے اندر خطرناک اور نقصان دہ ذرات کو بھی مٹاتا ہے۔
سائنسدان روزے کا تعلق خوراک، آنتوں اور دماغی صحت سے جوڑتے ہیں اور ان کا کہنا ہے کہ روزہ انسانی دماغ میں برین ڈیرائیوڈ نیوروٹروفک فیکٹر (brain derived neurotrophic factor)کو خارج کرنے تک پہنچا سکتا ہے یہ ایک ایسا عمل ہے جس سے دماغ اور ریڑھ کی ہڈی میں پروٹین فراہم ہوتے ہیں۔
اس سے یہ واضح ہوتا ہے کہ روزے کی حالت میں دماغی خُلیے محفوظ رہتے ہیں اور اس دوران دماغ سے تناؤ اور پریشانی بھی دور ہوجاتی ہے اس کے علاوہ روزے دار موٹاپے کا شکار بھی نہیں ہوتے اور وزن میں توازن برقرار رہتا ہے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.