پولیس تبدیلی کے دعوئےٹھس،خواتین، بچوں پر مبینہ بدترین تشدد کا ایک اور واقعہ سامنے آگیا

102

پاکپتن(ما نیٹرنگ ڈیسک)تبدیلی سرکار کے نئے پنجاب میں پولیس کی وہی پرانی روش ۔ ایک اور مبینہ پو لیس تشدد کا واقعہ سامنے آگیا۔ضلع پا کپتن کی تحصیل عارفوالا میں شادی کی تقریب پر پولیس جوانوں نے دھاوا بول کر خواتین اور بچوں کو تشدد کا نشانہ بنایا۔علاقہ میکینوں کے مطا بق بھٹہ نمبر 2عارفوالا میں بارات جب دلہن کے گھر پہنچی تو پولیس اہلکاروں نے دھاوا بول دیا۔ایس ایچ او سٹی سمیت درجنوں پولیس اہلکاروں نے مبینہ طور پربچوں اورخواتین کو بد ترین تشددکا نشانہ بنایااور بارات میں شامل 4افراد کو تشدد کرتے ہوئےتھانے لے گئے اور حوالات میں بند کر دیا۔ایف آئی آر متن کے مطابق 5عدد شرلیاں پٹاخے برآمد ہوئے تھے ۔

موصول ہونے والی ویڈیو میں پولیس اہلکار بارات میں شامل بچوں اورخواتین پر تشدد کرتے دکھائی دے رہے ہیں۔ شہریوں اور علاقہ میکینوں نے اعلیٰ حکام سے مطالبہ کیا ہے کہ خواتین اور بچوں پر تشدد کر نے والے پولیس افسراورا ہلکاروں کے خلاف کارروائی کی جا ئے۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.