بدنام زمانہ قبضہ مافیا ڈان منشا بم ڈیڑھ ماہ میں ہی ٹھس

114

لاہور(نیوزنامہ رپورٹ)لاہور کا بدنام زمانہ قبضہ مافیا ڈان منشا بم ڈیڑھ ماہ میں ہی کیا سے کیا ہوگیا۔پنجابی کی کہاوت ہے ـ’’سودن چور دا تے اک دن سادھ دا‘‘بدنام قبضہ مافیا منشا بم جو لاہور کے باسیوں کے لیے خوف کی علامت بنا ہوا تھا ۔اکڑ اور ٹھاٹھ باٹھ کے ساتھ بدمعاشی ،اپنی الگ ہی ریاست بنا رکھی تھی ،مگر قانون کی گرفت میں آیا تو چند دنوں میں جوُن ہی بدل گئی۔ہاتھ میں جدید ترین ترین اسلحہ پکڑ کر تکبر کے ساتھ تصاویر بنانے والے اور بڑے بڑے سیاسی رہنماؤں سے ملاقاتیں کرنے والے قبضہ مافیا منشا بم کے خلاف سپریم کورٹ نے کارروائی کا حکم دیا تو پولیس کی ہمت نہ ہوئی کہ اتنے بڑے ڈان کو پکڑسکیں۔سپریم کورٹ میں پندرہ اکتوبردوہزاراٹھارہ کو سرنڈر کیا تو اس وقت بھی نخوت اور تکبر چہرے پر واضح تھا۔مگر یکم دسمبر دوہزار اٹھارہ کوپولیس نے قبضہ مافیا منشا بم کو سپریم کورٹ لاہور رجسٹری میں پیش کیا تو وہ کسی کی پہچان میں ہی نہ آسکا،،،شریف شہریوں کی عمر بھر کی جمع پونجی پر قبضہ جمانے والا منشا بم یکم دسمبر دوہزار اٹھارہ کو سپریم کورٹ لاہور رجسٹری میں پیشی کے موقع پر ہاتھ جوڑ کر معافیاں مانگتا نظر آیا،اور چند ہی دنوں میں حلیہ بھی اتنا بدل گیا کہ پہچاننا ہی مشکل ہو گیا۔

جواب چھوڑیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا.